Announcement

Collapse
No announcement yet.

ہمیں ملنے پر کوئی اعتراض نہیں مگر ............

Collapse
X
  • Filter
  • Time
  • Show
Clear All
new posts

  • ہمیں ملنے پر کوئی اعتراض نہیں مگر ............

    ہمیں ملنے پر کوئی اعتراض نہیں مگر .................

    اجتماع عام کے بعد سراج الحق صاحب اور میاں شہباز شریف کی ملاقات کے سلسلے میں ہماری پرانی پوسٹ
    https://www.facebook.com/JIHitsBack/...50581368328200
    کے جواب میں کچھ دوستوں نے یہ کہا ہے......
    " ہمیں ملنے پر کوئی اعتراض نہیں ہے ، سیاستدانوں میں ملاقات تو ہوتی رہتی ہیں لیکن سراج صاحب نے شہباز شریف کی تعریف کی ہے"

    ان دوستوں سے عرض ہے کہ سراج صاحب کی پوری پریس کانفرنس کا ٹیکسٹ یہ ہے ، اب آپ ہمیں بتا دیں کہ سراج صاحب نے کہاں پر اس کی "تعریف " کی ہے .... آپ اس پریس کانفرنس کو اس لنک پر دیکھ سکتے ہیں
    http://www.dailymotion.com/video/x2a...mber-2014_news

    اسلامی پاکستان کے لیے ہم نے ایک نئے عزم ، جذبے اور ولولے کے ساتھ ایک سفر کا ، ایک مہم کا آغاز کیا
    اس اجتماع میں ہم نے عالم اسلام کے ان رہنماوں کو بلایا تھا جو دنیا کے مختلف ممالک میں دعوت و تبلیغ کے کام کے لیے، اسلام کی تعلیمات

    کو عام کرنے کے لیے اور اس دنیا میں الله رب العالمین کی حاکمیت کے لیے کام کر رہے ہیں . ہمارے اس پروگرام میں مصر سے ،ترکی سے ،

    سوڈان سے ، ملیشیا سے ، انڈونیشیا سے ، چائنا سے ، افغانستان سے ، ایران سے، سعودی عرب سے ، امریکا سے ، برطانیہ سے ، یوگنڈا

    سے ، کینیڈا سے ،جاپان سے ، امارات سے اور دنیا کے چوبیس ممالک کے نمائندوں نے شرکت کی ، اسلامی تحریکوں کے قائدین نے شرکت

    کی
    ہمارے ان وفود کو پنجاب کے وزیر اعلی شہباز شریف صاحب نے دعوت دی ، مہمانوں نے اس دعوت کو قبول کیا ، انہوں (شہباز شریف ) نے

    (مہمانوں کے لیے) ایک عصرانے کا اہتمام کیا جس پر میں پنجاب کے وزیر اعلی کا شکریہ بھی ادا کرتا ہوں
    انہوں نے پوری طرح سیکورٹی کے لحاظ سے ، جگہ کی فراہمی کے لحاظ سے ، جو کام ہو سکتا تھا تعاون کی کوشش کی اور آج ہمارے دنیا

    بھر سے آئے ہوئے مہمان یہاں پر جمع تھے . انہوں (شہباز شریف ) نے ان کو ویل کم کیا ، ان کے ساتھ خیالات کا تبادلہ کیا ، اور یہ بات

    بلکل ثابت ہوئی کہ ہمارے عالم اسلام کو ، امت کو اس وقت جس چیز کی ضرورت ہے وہ مسلمانوں کا اتحاد ہے اور آپ کو یہ سمجھنا چاہیے کہ

    جو مسلمانوں اور امت کے دشمن ہیں وہ تقسیم کرنا چاہتے ہیں عالم اسلام کو مسلکوں کی بنیاد پر ، شیعہ سنی کی بنیاد پر ، قومیتوں کی بنیاد پر

    بھی
    جہاں ایک قومیت کے لوگ رہتے ہیں تو اس کو مسلکوں کی بنیاد پر تقسیم کرتے ہیں ، اور جہاں ایک مسلک کے لوگ ہوتے ہیں وہاں ان کو قومیت

    اور قبیلے کی بنیاد پر تقسیم کرتے ہیں اور مغرب اور منفی قوتیں عالم اسلام کو جنگ کی طرف دھکیل رہے ہیں لیکن ہمیں ضرورت ہے ایک پرامن

    دنیا کی اس لیے کہ ہمارے ساتھ ایک علمی سرمایہ ہے ، ہمارے ساتھ دلیل ہے ، ہمارے ساتھ چودہ سو سال کا ایک شاندار ماضی ہے . ہمارے

    ساتھ مدینہ منورہ کے خلافت کے نظام کا ایک ماڈل ہے
    اس لیے ہمیں ایک ایسا ماحول چاہیے کہ ہم دنیا کے چھ ارب انسانوں کو اپنا حقیقی اور اسلامی پیغام پہنچا سکیں ، بہر حال یہ سفر جاری ہے ،

    پاکستان میں بھی ، دنیا کے مختلف ممالک میں اسلام اور دین کے حقیقی قیام کی جدوجہد میں ڈھیر سارے لوگ شریک ہیں ،
    میں ایک بار پھر آپ سب کا بھی شکریہ ادا کرتا ہوں ، میاں صاحب کا بھی کہ انہوں نے ہمارے مہمانوں کو عزت دی ، ان کو دعوت دی اور

    مہمانوں کا بھی شکریہ ادا کرتا ہوں کہ انہوں نے سفر کیا اور ہمیں یہ لمہ عطا کیا
    بہت بہت شکریہ "

    -----------------------------------------

    اگر آپ نے بھی سنی سنائی جھوٹی خبروں اور پوسٹوں کی بنا پر انجانے میں یہی الزام اپنی وال سے دہرایا ہے تو اب آپ پر یہ لازم ہے کہ اس پوسٹ کو بھی اپنی وال سے شیر کریں تا لک لوگ سچ جان سکیں


    Click image for larger version

Name:	1725006_853802514672752_2837662670883926717_n.jpg
Views:	1
Size:	179.1 KB
ID:	20271
Working...
X